دعا دربارِ باری تعالیٰ میں۔۔۔ شمس جیلانی

گرداب میں دنیا ہے پھنسی ہےوقت نزع کا
اک وقت معین ہے یہاں ہر شہ کی قضآ کا
مانے یا نہ مانے کوئی ہے یہ ہو گیا ثابت
چلتا ہے یہاں حکم فقط مومن کے خدا کا
اک ننےسے جرثومے سے دنیا کری تاراج
ہے حوصلہ کس میں بھلا مالک سےوغا کا
بس آؤ سبھی ملکر پکارو اسی دافع بلا کو
کرتے رہو ورد سدا محبوب خدا صل علیٰ کا
دا من کبھی صبر کا ہاتھوں سے نہ چھوڑو
منظر رہے آنکھوں میں بسا کر ب و بلا کا
غافل ہوئےایسےکہ اسے بھول گئے تھے!
یوں مستحق ٹھہرا یہ جہاں سخت سزا کا
امت کو تومعاف بھی کردے میرے مالک
ہے واسطہ تجھ کو سیدہ زَہرا کی رِدا کا
آئیں ابھی مل کر کے ہم آمین کہیں شمس
جاری اللہ کی رحمت ہے اور وا باب دعا کا

About shamsjilani

Poet, Writer, Editor, Additional Chief Editor AalamiaIkahbar London,
This entry was posted in shairi and tagged , . Bookmark the permalink.